کورونا بحران کے باعث ٹی 20 ورلڈ کپ ملتوی کر دیا گیا

ٹی 20 کرکٹ ورلڈ کپ 2020  کا افتتاحی میچ اس سال 18 اکتوبر اور فائنل 15 نومبر کو ہونے والا تھا

انرنیشنل کرکٹ کونسل کی طرف سے یہ حتمی بیان سامنے آ گیا ہے کہ کورونا ا وائرس کی وبا کے بحران کی وجہ سے اس سال آٓسٹریلیا میں ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ کا انعقاد ملتوی کر دیا گیا ہے۔ یاد رہے ٹی 20 ورلڈ کپ 2020  کا افتتاحی میچ اس سال 18 اکتوبر اور فائنل 15 نومبر کو ہونے والا تھا۔
 
آسٹریلیا نے دو ماہ قبل مئی میں آئی سی سی کو آگاہ کر دیا تھا کہ ورلڈ کپ جیسے بڑے ٹورنامنٹ میں شرکت کرنے واانٹرنیشنل ٹیموں کیلیے قرنطینہ کے انتظامات ناممکن ہیں۔ اور کرکٹ سٹیڈیم کے بند دروازوں میں یہ ٹورنامنٹ کروانے کا امکان نہیں ہے
 
یاد رہے کہ 2021 کا ٹی 20 ورلڈ کپ بھارت اور 2022 کا آسٹریلیا میں ہونا قرار پایا تھا ۔ انٹرنیشنل ککٹ کونسل اس امر پر غور کر رہی ہے کہ اگلے یعنی 2021 کے ورلڈ کپ ٹورنامنٹ کی میزبانی آسٹریلیا کو دے دی جائے۔ آئی سی سی نے دو ماہ تک اس ٹورنامنٹ کے مختلف امور اور ہر ممکنہ صورت حال پر غور و بحث کے بعد پیر کو اپنے فیصلے کا اعلان کیا ہے۔
چیف ایگزیکٹو مانو سوہنے نے کہا کہ 2020 کا ورلڈ کپ ملتوی کرنے کا فیصلہ تمام صورت حال کا جائزہ لینے کے بعد کیا گیا ہے۔ انٹر نیشنل کرکٹ کونسل کا کمرشل ونگ ما بعد اس بارے فیصلہ کرے گا کہ اگلا 2021 کا ٹی 20 ورلڈ کپ آسٹریلیا میں منعقد کیا جائے یا پھر طے شیڈول کے مطابق بھارت میں منعقد ہو گا۔
 
انٹر نیشنل کرکٹ کونسل اگلے تین ٹی 20 ورلڈ کپ ٹورنامنٹس کی تاریخوں اور مقامات کا فیصلہ کرے گی تاکہ تمام ملکی کرکٹ بورڈز ہر طرح کے انتظامی اور مالی معاملات کیلئے بہتر منصوبہ بندی کر سکیں۔ امید ہے کہ کورونا کے وبائی بحران کی وجوہات سے ہونے والی مالی نقصانات کا بہتر پلاننگ سے ازالہ کیا جا سکے گا۔
 
دوسری طرف انڈین پریس اینڈ میڈیا کا کہنا ہے کہ 2020 کا ورلڈ کپ نہ ہونے کی وجہ سے بھارتی بورڈ کے پاس موقع ہے کہ وہ سال کے آغاز میں ملتوی کی گئی انڈین پریمئیر لیگ کو اک سیف وینیو یعنی متحدہ عرب امارات میں منعقد کرے۔ بھارت میں اس صورت حال میں  ٹورنامنٹ ہونا ممکن نہیں جہاں کرونا وائرس کے 11 لاکھ کیسز کی تصدیق کے ساتھ 27 ہزار اموات ہو چکی ہیں۔
 
ماہرین کرکٹ کے مطابق اگر متحدہ عرب امارات کے مطابق آئی پی ایل کے انعقاد کا فیصلہ کیا گیا تو اس کا آغاز اس سال ستمبر کے پہلے ہفتے میں ہو گا جو ممکنہ طور پر نومبر کے دوسرے ہفتے تک جاری رہے گا۔ اس حوالے سے متحدہ عرب امارات کی انتظامیہ کا موقف سامنے آنا باقی ہے ۔
فاروق رشید بٹ
عالمی امن اور اتحاد اسلامی کا پیام بر ، نام فاروق رشید بٹ اور تخلص درویش ہے، سابقہ بینکر ، کالم نویس ، شاعر اور ورڈپریس ویب ماسٹر ہوں ۔ آج کل ہوٹل مینجمنٹ کے پیشہ سے منسلک ہوں ۔۔۔۔۔

تازہ ترین خبریں

کورونا بحران کے باعث ٹی 20 ورلڈ کپ ملتوی کر دیا گیا

انرنیشنل کرکٹ کونسل کی طرف سے یہ حتمی بیان سامنے آ...

ایران میں حکومت کے مخالف صحافیوں کو سخت سزاؤں کا سلسلہ جاری ہے

مغربی اور امریکی میڈیا کے مطابق ایرانی سرکاری عدالت نے وائس...

Comments

Leave a Reply

تازہ ترین خبریں